Can't connect right now! retry

خلاء میں بنایا جانے والا پہلا ہوٹل کیسا ہوگا؟

اسپیس ہوٹل میں تمام وہی سہولیات فراہم کی جائیں گی جو کہ سمندر میں چلنے والی کروز شپ میں فراہم کی جاتی ہیں، رپورٹس— فوٹو: ووگیار اسٹیشن

خلاء میں بنایا جانے والا پہلا اسپیس ہوٹل 2025 میں مکمل ہوگا جسے 2027 میں آپریشنل کیا جائے گا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق زمین کے ذیلی مدار میں بنائے جانے والے دنیا کے اس پہلے اسپیس ہوٹل میں ریسٹورنٹ، سنیما ہالز  اور  خصوصی قیام گاہیں (لیونگ پاڈز) بنائے جائیں گے جبکہ اس ہوٹل میں 400 افراد کی گنجائش ہوگی۔

یہ ہوٹل خلائی تعمیرات کے حوالے سے مشہور کمپنی آربیٹل اسمبلی کارپوریشن کی جانب سے تعمیر کیا جارہا ہے جسے 2027 میں آپریشنل کیا جائے گا۔

— فوٹو: ووگیار اسٹیشن

رپورٹس کے مطابق اسپیس ہوٹل میں وہ تمام سہولیات فراہم کی جائیں گی جو کہ سمندر میں چلنے والی کروز شپ میں فراہم کی جاتی ہیں۔

یہ ہوٹل ایک گھومنے والے رنگ کی طرح بنایا جائے گا جس میں خصوصی طور پر تیار کردہ قیام گاہیں (پوڈز) جوڑی جائیں گی۔

رپورٹس کے مطابق ہوٹل بنانے والے ڈویلپرز کی جانب سے خصوصی طور پر تیار کردہ قیام گاہیں ناسا اور یورپی اسپیس ایجنسی کو ریسرچ کیلئے بھی بیچی جاسکتی ہیں۔

— فوٹو: ووگیار اسٹیشن

رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ ہوٹل کا ڈیزائن متعدد دائروں پر مبنی ہوگا جس میں متعدد موڈیولز ہوں گے۔ ان میں سے زیادہ تر موڈیولز دائرے کے بیرونی حصے میں تعمیر ہوں گے جن میں ریسٹورینٹس وغیرہ ہوں گے جبکہ  24  ماڈیولز کمپنی کے زیر استعمال ہوں گے جن میں عملے کے ارکان کی رہائش، ہوٹل کیلئے پانی، بجلی اور ہوا وغیرہ کا بندوبست کیا جائے گا۔

اس کے علاوہ دیگر یونٹس حکومتوں اور نجی کمپنیز کو فروخت یا لیز پر بھی دیا جاسکلے گا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM